The news is by your side.

Advertisement

کیا اومیکرون کا دوسرا ویرینٹ زیادہ مہلک ہے؟ ڈبلیو ایچ او کی رپورٹ

جنیوا: عالمی ادارہ صحت کا کہنا ہے کہ اومیکرون کا دوسرا ویرینٹ بھی پہلے والے سے مختلف نہیں ہے۔

تفصیلات کے مطابق ڈبلیو ایچ او کی سینئر عہدے دار ماریہ وان کرکوو نے کہا ہے کہ اومیکرون کا بی اے 2 ویرینٹ پہلی قسم (بی اے 1) سے زیادہ مہلک نہیں ہے۔

عالمی ادارہ صحت کی کرونا رسپانس ٹیم کی سربراہ نے کہا کہ دنیا کے مختلف لوگوں کے نمونوں کی بنیاد پر ہم دونوں اقسام میں کوئی فرق نہیں سمجھ رہے، دونوں ایک جیسا متاثر کرتے ہیں، اور یہ کہنا بہت ضروری ہے کیوں کہ بعض ممالک میں دونوں اقسام پائی جاتی ہیں۔

ماریہ وان وائرس کی ابتدا ماپنے والے ماہرین کی کمیٹی کی تحقیق پر رپورٹ پیش کر رہی تھیں، انھوں نے کہا ان نتائج سے ڈنمارک جیسے ممالک کو مدد ملے گی جہاں اومیکرون کا بی اے 2 ویرینٹ رپورٹ ہوا ہے۔

واضح رہے کہ ڈبلیو ایچ او کا کہنا ہے کہ نئے ویرینٹس پہلے والوں سے زیادہ پھیلاؤ کی صلاحیت رکھتے ہیں، تاہم اچھی بات یہ ہے کہ دنیا بھر میں تمام اقسام کا پھیلاؤ اب کم ہوتا جا رہا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں