The news is by your side.

Advertisement

موسمیاتی تبدیلی، درجنوں والرس پہاڑوں سے گرکر ہلاک

انٹارکٹکا: دنیا کے پانچویں بڑے براعظم میں موسمیاتی تبدیلیوں کے باعث درجنوں والرس پہاڑوں سے گرکر ہلاک ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق سرد ترین براعظم انٹارکٹکا میں موسمیاتی تبدیلیوں کے باعث پہاڑوں پر برف پگھل رہے ہیں، اس صورت حال کے پیش نظر آبی جانور ہلاک ہورہے ہیں.

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق چودہ ہزار 425 ملین مربع کلومیٹر کے ساتھ انٹارکٹکا ایشیا، افریقا، شمالی امریکا اور جنوبی امریکاکے بعد دنیا کا پانچواں بڑا براعظم ہے۔

سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے، متعدد والرس پہاڑوں سے گرتے دکھائی دے رہے ہیں جس سے ماہرین کو شدید تشویش لاحق ہے۔

جنگی حیات اور ماحولیات کے ماہرین کا کہنا ہے کہ ماحولیاتی تبدیلی کے باعث والرس پہاڑوں کا رخ کررہے ہیں، جبکہ پہاڑوں پر برف نہ ہونے ان کی ہلاکت کی وجہ بن رہی ہے۔

پانی میں رہنے والے اس جانور کو خشکی پر کم دکھائی دیتا ہے، حجم کے اعتبار سے پھیلی ہوئی جسامت کے باعث والرس پہاڑوں پر اپنا توازن برقرار نہیں رکھ پاتے۔

دوسری جانب جنگلی حیات کی عالمی تنظیم ڈبلیو ڈبلیو ایف نے بھی اسی امر کی تصدیق کرتے ہوئے تشویش کا اظہار کیا ہے۔ ان کے مطابق برف پگلنے کے باعث والرس پہاڑوں کا رخ کررہے ہیں جو ان کی جان کے لیے انتہائی خطرناک ہے۔

خیال رہے کہ انٹارکٹکا 98 فیصد برف سے ڈھکا ہوا ہوتا ہے، جس کے باعث وہاں کوئی باقاعدہ و مستقل انسانی بستی نہیں۔ صرف سائنسی مقاصد کے لیے وہاں مختلف ممالک کے سائنس دان قیام پزیر ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں