The news is by your side.

Advertisement

علی ظفر پر ہراساں کرنے کا جھوٹا الزام لگانے والی خاتون نے معافی مانگ لی

لاہور : راک اسٹار علی ظفر پر ہراساں کرنے کا جھوٹا الزام لگانے والی خاتون نے معافی مانگ لی ، صوفی نے گزشتہ برس میشاشفیع کےالزامات کے بعد علی ظفر پر ہراساں کرنے کا الزام لگایا تھا۔

تفصیلات کے مطابق راک اسٹار علی ظفر پرلگےالزام جھوٹے ثابت ہونے لگے، ہراساں کرنے کا الزام لگانے والی خاتون صوفی نے غلطی کا اعتراف کرتے ہوئے علی ظفر سے معافی مانگ لی۔

صوفی نے ٹویٹر اکاونٹ پر پیغام جاری کرتے ہوئے اس جھوٹے الزام کے پیچھے چھپی پوری کہانی بیان کی اور کہا ایک لڑکی کے گمراہ کرنے پر علی ظفر پر جھوٹا الزام لگایا،غلطی مان کرمعافی مانگ رہی ہوں ، معافی بہت پہلے مانگنا چاہتی تھی لیکن سوشل میڈیا پر تنقید سے ڈرتی تھی۔

علی ظفر نے جواب میں صوفی کی ہمت اوربہادری کوسراہا اور معذرت قبول کرکےدعا دیتے ہوئے پیغام میں لکھا بہادری سےغلطی تسلیم کرنے پروہ ہمیشہ یاد رہیں گی۔

خیال رہے صوفی نے گزشتہ برس میشاشفیع کے الزامات چند گھنٹے بعد ہی علی ظفر پر امریکہ میں ایک خاتون کو ہراساں کرنے کا الزام عائد کیا تھا، اس الزام کی تردید اس وقت شوکت خانم کی نمائندہ نے کی تھی جو کہ علی کے ساتھ امریکہ میں ہسپتال کے اس فنڈ ریڈنگ تقریب میں موجود تھیں۔

اس تردید کے بعد صوفی نے اپنا ٹویٹر اکاونٹ ڈی ایکٹویٹ کر دیا تھا اور گزشتہ روز صوفی نے اپنا ٹویٹڑ اکاونٹ دوبارہ بحال کر کے علی ظفر سے معافی مانگی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں