تازہ ترین

عثمان ڈار کا سیاست اور پی ٹی آئی چھوڑنے کا اعلان

اسلام آباد: پی ٹی آئی رہنما عثمان ڈار نے...

چمن بارڈر کراسنگ پر افغان سنتری کی بلا اشتعال فائرنگ، 2 پاکستانی شہری شہید

بلوچستان میں پاک افغان سرحد کے قریب چمن کراسنگ...

آرمی چیف سے امریکی وزیر دفاع کا ٹیلی فونک رابطہ

اسلام آباد : آرمی چیف جنرل عاصم منیر اور...

بھارت: ناک کے ذریعے دی جانے والی دنیا کی پہلی کرونا ویکسین استعمال کے لیے منظور

نئی دہلی: بھارتی حکومت نے ناک کے ذریعے دی جانے والی دنیا کی پہلی کرونا ویکسین کے ایمرجنسی استعمال کی منظوری دے دی۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارتی محکمہ صحت نے جمعہ کو بھارت بائیوٹک کی تیار کردہ نیزل کووِڈ ویکسین کو بوسٹر ڈوز کے طور پر منظور کر لیا ہے، ابتدائی طور پر یہ نجی مراکز پر دستیاب ہوگی۔

بھارتی حکومت نے گزشتہ روز 23 دسمبر کو دنیا کی پہلی منظور شدہ نیزل کووڈ ویکسین کی تقسیم شروع کر دی ہے۔ یہ ویکسین وسیع طور پر قوت مدافعت کے عمل کو متحرک کرنے میں مددگار ہوگی۔

کرونا وائرسز عام طور پر ناک میں موجود میوکوسا نامی ٹشو کے ذریعے جسم میں داخل ہوتے ہیں، اور میوکوسل جھلی میں موجود خلیات اور مالیکیولز کو متاثر کر دیتے ہیں۔

ماہرین کے مطابق نیزل شاٹ کے ذریعے سے وائرس کو جسم میں داخل ہونے سے پہلے ہی ختم کیا جا سکتا ہے، بھارت بائیوٹک کے مطابق یہ نیزل ویکسین دیگر ویکسینوں سے کافی الگ اور زیادہ مؤثر ہے۔

ناک کے ذریعے دی جانے کی وجہ سے انجیکشن کی تکلیف سے لوگ بچ جائیں گے، اسے استعمال میں لانا بھی آسان ہے اور گھر پر بھی رکھی جا سکتی ہے، اور استعمال کے لیے تربیت یافتہ طبی عملے کی ضرورت نہیں پڑتی۔

نیزل ویکسین کی ایک ڈوز کل 8 قطروں پر مشتمل ہے (0.5 ملی لیٹر فی خوراک)، 4 قطرے ہر نتھنے میں ڈالے جائیں گے، اور 4 ہفتوں کے وقفے سے اس کی 2 خوراکیں دی جائیں گی۔

Comments

- Advertisement -