The news is by your side.

Advertisement

افغان سر زمین پاکستان کیخلاف استعمال نہیں ہونے دینگے، ذبیح اللہ مجاہد

کابل : نائب افغان وزیر اطلاعات ذبیح اللہ مجاہد نے کہا ہے کہ ہم کسی کواجازت نہیں دیں گے کہ وہ افغانستان کی سرزمین پاکستان کے خلاف استعمال کرے۔

یہ بات انہوں نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہی، ذبیح اللہ مجاہد کا پاکستانی صحافیوں کے سوالات پہ آڈیو جوابات دیتے ہوئے کہنا تھا کہ امارت اسلامیہ خطے اور خصوصاً اپنے پڑوس میں امن چاہتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان ہمارا پڑوسی ملک ہے، بہت سارے افغان مہاجرین وہاں رہائش پذیر ہیں، ان کا تحفظ بھی ہمارے اپنے شہریوں کا تحفظ ہے۔

ذبیح اللہ مجاہد کا کہنا تھا کہ ہماری کوشش ہے وہاں بھی امن اور مصالحت کی صورت نکلے، ہم چاہتے ہیں مذاکرات کامیاب ہوں اور فریقین میں اتفاق رائے سامنے آئے۔

نائب افغان وزیر اطلاعات نے کہا کہ امید ہےاس بار مذاکرات کامیاب ہوں گے اور مخلصانہ انداز میں آگے بڑھیں گے، ہم امریکا سے بہتر تعلقات کے خواہش مند ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ جنگ کا موسم گزر چکا ہے، ہم مزید دشمنی نہیں چاہتے، امریکا کے لیے ضروری ہے کہ افغانستان سے بہتر تعلقات قائم کرے اور افغانستان کے منجمد اثاثے بحال کرے۔

افغان رہنما نے بھارت میں بی جے پی رہنماؤں کے گستاخانہ بیان کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ بھارت میں جنونی انتہا پسندوں کو دین اسلام کی توہین کی اجازت نہ دی جائے۔

ذبیح اللہ مجاہد نے کہا کہ ایسے جنونی انتہا پسندوں کو مسلمانوں کے جذبات کو مشتعل کرنے کی بھی اجازت نہ دی جائے۔

انہوں نے کہا کہ ہم تمام مسائل مذاکرات کے ذریعے حل کرنے کو تیار ہیں، ہم نے عالمی برادری سے کم عرصے میں اچھے تعلقات قائم کیے، افغانستان میں اب ایک ذمہ دار اور حقیقی نمائندہ حکومت ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں