The news is by your side.

Advertisement

ٹی ٹی پی کے محمد خراسانی کی ہلاکت کیسے ہوئی؟ اہم انکشاف

کراچی: کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے کمانڈر محمد خراسانی کی ہلاکت سر پر کلہاڑی کے وار سے ہوئی۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق ذرائع کا کہنا ہے کہ ٹی ٹی پی کے کمانڈر محمد خراسانی کی ہلاکت کے بعد کالعدم ٹی ٹی پی کے حلقوں میں بوکھلاہٹ ہے، کالعدم ٹی ٹی پی پریشان ہے کہ کیسے اس کے ٹھکانوں میں گھس کر کارروائی ہوئی۔

ذرائع کا بتانا ہے کہ محمد خراسانی کے بعد دیگر ٹی ٹی کے اہم کمانڈروں پر بھی حملوں کی اطلاعات ہیں۔

ذرائع کے مطابق محمد خراسانی کی ہلاکت کے بعد ٹی ٹی پی خاصی حیران ہیں، ٹی ٹی پی کے دیگر کمانڈروں پر بھی حملے کیے گئے ہیں لیکن اس کی تصدیق نہیں ہوسکی۔

واضح رہے کہ ٹی ٹی پی کے ننگرہار اور کنڑ میں محفوظ ٹھکانے موجود ہیں۔

یاد رہے کہ محمد خراسانی کی بوری بند لاش برآمد ہوئی تھی جس کے بعد افغان طالبان کے رہنماؤں کو دیکھا گیا تھا۔

دہشت گرد محمد خراسانی تحریک طالبان پاکستان کا ترجمان تھا، اور اس کا اصل نام خالد بلتی تھا، محمد خراسانی میرانشاہ میں دہشت گردی کا مرکز چلا رہا تھا۔

آپریشن ضربِ عضب کی کامیابی کے بعد محمد خراسانی افغانستان بھاگ گیا تھا، وہ شاہد اللہ شاہد کے بعد کالعدم ٹی ٹی پی کا ترجمان بنا تھا۔

محمد خراسانی معصوم عوام اور سیکیورٹی فورسز پر حملوں میں ملوث تھا، وہ ٹی ٹی پی کے مختلف دھڑوں کو متحد کرنے میں مصروف تھا، اور ٹی ٹی پی کے سربراہ مفتی نور ولی محسود کے ساتھ مل کرپاکستان کے خلاف دہشت گردانہ کارروائیوں کی منصوبہ بندی کر رہا تھا۔

علاوہ ازیں ٹی ٹی پی دہشت گرد محمد خراسانی نے حال ہی میں پاکستان کے اندر مختلف کارروائیوں کا اشارہ بھی دیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں