داعش سے تعلق کے الزام میں برطانوی ڈاکٹر شام میں گرفتار British doctors
The news is by your side.

Advertisement

داعش سے تعلق کے الزام میں برطانوی ڈاکٹر شام میں گرفتار

لندن/دمشق : کرد فورسز نے داعش کے لیے خدمات انجام دینے والے برطانوی ڈاکٹر کو شامی صوبے دیر الزور سے گرفتار کرکے امریکا کے زیر قبضہ علاقے میں واقع جیل میں قید کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق مشرق وسطیٰ میں خانہ جنگی سے دوچار ملک شام میں سیکیورٹی فورسز نے صوبہ دیر الزور سے داعش سے رابطے کے شبے میں ایک شخص کو گرفتار کیا ہے جو پیشے سے ڈاکٹر اور برطانوی شہریت کا حامل ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ کرد فورسز کے ہاتھوں گرفتار ہونے والے برطانوی شہری کی شناخت انور میاں کے نام سے ہوئی جو برطانیہ کے شہر برمنگھم کا رہائشی ہے۔

برطانوی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ داعش کے لیے خدمات انجام دینے والا شخص پیشے سے ڈاکٹر ہے جو گذشتہ چار برس سے شام میں داعش کے زیر قبضہ علاقوں کے اسپتالوں میں داعشی دہشت گردوں کے علاج میں مصروف تھا۔

برطانوی میڈیا نے بتایا ہے کہ گرفتار ڈاکٹر کی ویڈیو بھی سوشل میڈیا پر جاری کی گئی ہے جس میں اس نے اعتراف کیا ہے کہ وہ گذشتہ چار برس سے شام میں مقیم ہے، ڈاکٹر انور میاں کو امریکی افواج کے زیر قبضہ علاقے میں واقع جیل میں قید رکھا گیا ہے۔

برطانوی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ شام میں موجود امریکی فورسز اور کرد ملیشیاء کی جانب سے داعش سے تعلق کے الزام میں مزید تین برطانوی شہریوں کو گرفتار کیا گیا ہے، گرفتار افراد میں سے دو لندن کے رہائشی ہیں جنہیں رواں برس جنوری میں گرفتار کیا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں