The news is by your side.

Advertisement

جھوٹی خبروں کی نشاندہی کے لیے فیس بک مددگار

سان فرانسسکو: فیس بک پر جھوٹی اور من گھڑت خبروں کی نشاندہی کے لیے فیس بک انتظامیہ نے نیا ٹول متعارف کروا دیا ہے جو آپ کو خبر کی سچائی کو پرکھنے کے لیے کارآمد ٹپس سے آگاہ کرے گا۔

امریکا، فرانس اور دیگر کئی ممالک میں شروع کیے جانے والے اس اقدام کے تحت فیس بک کی نیوز فیڈ پر ایک ٹول ’اویئرنس ڈسپلے‘ شامل کیا گیا ہے۔

جب اس ٹول پر کلک کیا جائے گا تو صارف کے سامنے ایک ونڈو آجائے گی جس میں اسے خبر کی صداقت پرکھنے میں معاون کچھ ٹپس بتائی جائیں گی۔

فیس بک کی جانب سے شائع کیے گئے بلاگ پوسٹ کے مطابق ان ٹپس میں صارف کو مذکورہ خبر کا ویب سائٹ ایڈریس چیک کرنے اور دیگر ذرائع سے خبر کو ڈھونڈنے سمیت دیگر ٹپس شامل ہوں گی۔

یاد رہے کہ فیس بک پر جھوٹی خبروں کا تنازعہ اس وقت سامنے آیا جب امریکی صدارتی انتخاب میں فیس بک پر جانبدار ہونے کا الزام عائد کیا گیا اور کہا گیا کہ فیس بک نے جھوٹی خبریں پھیلا کر انتخابات کے نتائج پر اثر انداز ہونے اور ووٹرز کو گمراہ کرنے کی کوشش کی۔

تنازعہ کے بعد انٹرنیٹ کے سب سے بڑے سرچ انجن گوگل نے بھی اس حوالے سے اہم قدم اٹھاتے ہوئے خبروں کا صفحہ تبدیل کرنے کا فیصلہ کیا۔

مزید پڑھیں: جعلی خبروں سے بچنے کے لیے گوگل کا اہم فیصلہ

گوگل نے حفظ ماتقدم کے طور پر خبروں کی تلاش کے لیے ترتیب دیے گئے صفحہ ’ان دا نیوز‘ کا نام بدل کر ٹاپ اسٹوریز کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔ گوگل کے مطابق اس اقدام کے بعد سرچ انجن اس سے بری الذمہ ہوجائے گا کہ اس پر تلاش کی جانے والی خبریں درست ہیں یا غلط۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں