The news is by your side.

Advertisement

فیصل آباد: لاوارث بچی سے نامعلوم شخص کی زیادتی

فیصل آباد: نامعلوم وحشی درندے نے لاوارث بچی کو زیادتی کا نشانہ بناڈالا، طبی معائنے کے دوران بچی سے زیادتی کی تصدیق ہوگئی۔

پولیس ذرائع کے مطابق واقعہ گذشتہ سال نومبر میں پیش آیا تھا، جہاں پندرہ سالہ لاوارث بچی کو نامعلوم شخص نے زیادتی کا نشانہ بنایا تھا، واقعے کے بعد بچی کو چائلڈ پروٹیکشن بیورو کے حوالے کیا گیا، بچی نے اپنا نام ماہم جبکہ والد کا نام سرور بتایا تھا، تاہم بچی اپنے گھر کا پتہ بتانے سے قاصر رہی۔

پولیس حکام نے بتایا کہ دارالامان منتقلی پر بچی کو طبی معائنہ کرایا گیا تو وہ تین ہفتے کی حاملہ نکلی، جس پر چائلڈ پروٹیکشن افسر روبینہ اقبال کی مدعیت میں تھانہ جھمرہ میں نامعلوم شخص کے خلاف مقدمے کا اندراج کیا گیا، مقدمے میں زیادتی اور چلڈرن ایکٹ کی دو دفعات شامل کی گئیں ہیں۔

واضح رہے کہ صوبہ پنجاب کے ضلع فیصل آباد میں مسلسل بچوں اور بچیوں سے زیادتی کے واقعات ایک بار پھر تیزی سے بڑھنے لگے ہیں۔

گذشتہ سال اگست میں فیصل آباد میں پانچ سالہ بچے سے زیادتی کیس میں گرفتار ملزمان کو چھڑانے کی کوشش کرنے والے 4 حملہ آوروں کو مقابلے میں ہلاک کردیا گیا تھا۔

ستمبر دوہزار بیس میں فیصل آباد کے جھنگ بازار سے پانچ ملزمان نے لڑکی کو اغوا کرنے بعد اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں