The news is by your side.

Advertisement

آج خیبرپختونخواہ میں سب سے زیادہ کرپشن ہے: مولانا فضل الرحمان

فتح کیے لئے جمہوریت اورعوام ہی اصل ذریعہ ہیں

نوشہرہ: جمعیت علمائے اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ آج خیبر پختونخواہ میں سب سے زیادہ کرپشن ہے.

ان خیالات کا اظہار انھوں نے نوشہرہ میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ عمران خان نے خود بھی وفاق میں حکومت نہ ملنے پر شکرادا کیا تھا، اگر ایسا ہوجاتا، تو ملک کو شدید نقصان پہنچتا، ان کا کہنا تھا کہ فتح کیے لئے جمہوریت اورعوام ہی اصل ذریعہ ہیں.

متحدہ مجلس عمل کی تجدید سے متعلق انھوں نے کہا کہ مذہب اور ریاست کو الگ کرنے کی کوشش کی جاتی ہے، جو درست نہیں، ہمارے ہاں مذہبی جماعتیں اکٹھی نہ ہونے پربھی طعنہ دیا جاتا ہے.

مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ وہ فاٹا کے انضمام کے مخالف نہیں، البتہ فاٹا کی تقدیر کا فیصلہ قبائلی عوام کو کرنا چاہیے۔

انھوں نے کہا کہ ایم ایم اے کی حکومت میں سب کم کرپشن خیبر پختونخواہ میں تھی، آج صورت حال اس کے برعکس ہے، آج سیاست دباؤ کا شکار ہے، ہم مکمل اسلامی ریاست چاہتے ہیں۔

یاد رہے کہ گذشتہ دنوں پشاور میں خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے کہا تھا کہ سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ پاکستان بظاہر اسلامی مملکت کہلاتا ہے، مگر ریاست اور ملک کے نظام پر مذہب بیزار قوتوں کا قبضہ ہے۔


ریاست، ملک کے نظام پر مذہب بیزار قوتوں کا قبضہ ہے، مولانا فضل الرحمان


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں