site
stats
عالمی خبریں

جرمنی کا اپنےہی دوشہریوں کوملک بدرکرنےکااعلان

برلن : جرمنی کا اپنے ہی دو شہریوں کو دہشت گردی کے شہبےمیں ملک بدر کرنے کا اعلان کیا ہے۔دونوں کو رواں سال اپریل تک ملک سے نکال دیاجائےگا۔

تفصیلات کےمطابق جرمنی کا کہناہےکہ وہ اپنے ملک کےدوشہریوں کو ملک بدرکرے گا۔یہ دونوں شہری جرمنی میں پیدا ہوئے لیکن ان کے والدین غیرملکی ہیں۔

جرمنی کی تاریخ میں یہ پہلا واقعہ ہےکہ اپنے ہی دو شہریوں کو ملک بدرکیاجارہاہے۔ان میں سے ایک کا تعلق الجیریا جبکہ دوسرے کا تعلق نائجیریاسے ہے۔

خیال رہےکہ گزشتہ ماہ جرمنی کے مرکزی شہر گوٹنجن میں چھاپے کے دوران ایک گھر سے ایک بندوق اور شدت پسند تنظیم دولت اسلامیہ کا جھنڈا برآمد کیا گیا تھا۔

Germany

جرمن پولیس کی جانب سے چھاپےکےدوران 27 سالہ الجیریا نژاد اور 22 سالہ نائجیریا نژاد افراد کودہشت گرد حملے کی منصوبہ بندی کےشبہےمیں گرفتار کیاگیا تھا۔


مزید پڑھیں:برلن :کرسمس بازار میں ٹرک نےشہریوں کو کچل دیا، 12افرادہلاک


پولیس ان دونوں افرد پر عدالت میں دہشت گردی کی منصوبہ سے متعلق لگائے گئے الزامات ثابت نہ کرسکی جس کےبعد ان پرسے مقدمات ہٹالیے گئے ہیں۔

Germany

لوور سیکسونی کے وزیر داخلہ بورس پسٹوریئس نے کہا کہ ملک بدری رواں سال اپریل کے وسط تک کر دی جائے گی۔

انہوں نےکہاکہ الجیریا اور نائجیریا کے ساتھ اس بارے میں بات چیت جاری ہے اور ان دونوں افراد پر جرمنی میں داخل ہونے پر تاحیات پابندی ہوگی۔

واضح رہےکہ گزشتہ سال19 دسمبر کو برلن کرسمس مارکٹ میں ہونے والے حملے میں 12 افراد ہلاک جبکہ متعدد زخمی ہوئےتھے۔

Germany

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top