The news is by your side.

Advertisement

حمیرہ ارشد ایک بار پھرخلع کے لیے عدالت پہنچ گئیں

لاہور: نامورگلوکارہ حمیرہ ارشد نے خلع کےلیے ایک بار پھر فیملی کورٹ سے رجوع کرلیا ہے، ان کا کہنا ہے کہ آئے روز کے جھگڑوں اور تشدد کی وجہ سے اب  شوہر کے ساتھ نہیں رہ سکتیں۔

تفصیلات کے مطابق حمیرہ ارشد ایک بار پھر اپنے شوہراحمد بٹ سے علیحدگی کے لیے عدالت کا دروازہ کھٹکھٹا رہی ہیں، ان کا موقف ہے کہ بیٹے کے بہتر مستقبل کے لیے راضی نامہ کیا تھا تاہم اب صورت حال ایسی ہے کہ ساتھ رہنا ممکن نہیں رہا ہے۔

 یاد رہے کہ حمیرہ  ارشد اور احمد بٹ گزشتہ 14 برس سے شادی کے بندھن میں بندھے ہوئے ہیں۔   2برس قبل دونوں کے درمیان شدید اختلافات سامنے آئے،جس کے بعد حمیرہ  ارشد نے احمد بٹ سے علیحدگی کے لیے فیملی کورٹ میں درخواست دائر کی تھی، تاہم عدالتی کارروائی کے دوران ہی  دونوں میاں بیوی نے اختلافات ختم کر کے صلح کر لی تھی۔،

تاہم اب حمیرہ  ارشد کی جانب سے  ایک بار پھر خلع کے لیے درخواست دائر کی گئی ہے جس میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ  ان کے  خاوند احمد بٹ   آئے روز انہیں  تشدد کا نشانہ بناتے   ہیں  اور لڑائی جھگڑا ،  ہنگامہ آرائی  روز کا معمول بن چکی ہے۔ اس صورتحال میں وہ مزید اپنے شوہر کے ساتھ نہیں رہ سکتیں لہذا ان کے حق میں خلع کی ڈگری جاری کرے۔

 حمیرہ ارشد کی جانب سے مزید کہا گیا کہ احمد بٹ کی جانب سے انہیں  مسلسل حراساں کیا جا رہا ہے  اور ان کی  کردار کشی  بھی کی جا رہی ہے، ان کا کہنا تھا کہ  پہلے بھی انہوں نے اپنے بیٹے کے بہتر  مستقبل کے لیے اپنے شوہر سے  صلح کرلی تھی ، تاہم اب حالات اس موڑ پر کھڑے ہیں جہاں ساتھ ساتھ رہنا ممکن نہیں ہوسکتا۔

 گلوکارہ حمیرہ ارشد اور ان کے شوہر اداکار احمد بٹ کی ازدواجی زندگی طویل عرصے سے اتار چڑھاؤ کا شکار ہے۔دونوں اکثر اوقات میڈیا میں ایک دوسرے پر الزمات لگاتے نظر آتے ہیں،حمیرہ ارشد ماضی میں اپنے شوہر پر چوری جیسا الزام بھی لگاچکی ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات  کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں