The news is by your side.

اسلام آباد میں احتجاج کی اجازت کے لیے پی ٹی آئی سے فنانشل گارنٹی لینے کی تجویز

اسلام آباد : آئی جی اسلام آباد نے احتجاج کی اجازت کے لیے پاکستان تحریک انصاف سے فنانشل گارنٹی لینے کی تجویز دے دی۔

تفصیلات کے مطابق پی ٹی آئی کے لانگ مارچ اور احتجاج سے متعلق آئی جی اسلام آباد نے تفصیلی رپورٹ اسلام آباد ہائی کورٹ میں جمع کروادی۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ پی ٹی آئی25مئی کوبھی اپنی گارنٹی کی خلاف ورزی کرچکی، علی امین گنڈا پور اور دیگر پی ٹی آئی رہنماؤں کے اشتعال انگیز بیانات بھی رپورٹ کا حصہ ہیں۔

رپورٹ میں کہنا تھا کہ پی ٹی آئی کےایک رہنمانےوزیرداخلہ کودھمکی بھی دی، ویڈیوزموجود ہیں جن میں کارکنوں کو غلیلیں بھی دی جارہی ہیں۔

آئی جی اسلام آباد کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ شیخ رشیداورفیصل واوڈاکہہ چکےیہ خونی مارچ ہوگا ، خود عمران خان بھی تسلیم کرچکےان کےکچھ لوگ مسلح ہیں۔

رپورٹ کے مطابق سپریم کورٹ واضح کرچکی اجتماع کی اجازت جمہوری حق کے طور پر دی جاتی ہے، اجتماع قانونی حکومت کوختم کرانے کیلئے نہیں ہوسکتا۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ احتجاج سےڈپلومیٹک موومنٹ بھی بندہو تی ہے، ائیرپورٹ تک جانےوالےراستوں پروفاقی ایجنسیزکواختیاردیاجائے۔

رپورٹ میں تجویز دی گئی ہے کہ پی ٹی آئی سےفنانشل گارنٹی بھی لی جا سکتی ہےکہ کوئی نقصان نہ ہو، پی ٹی آئی مطلوبہ ضمانت دے دے تو کنٹینرز بھی رکھنےکی ضرورت نہیں ہوگی۔

عدالتی فیصلوں کےمطابق ہی پی ٹی آئی کو احتجاج کی اجازت دی جائے، مطلوبہ شرائط کے مطابق احتجاج ہوا تو سکیورٹی دینے کو تیار ہیں۔

آئی جی نے عمران خان کی لاحق خطرات سے متعلق تھریٹ الرٹس کو بھی رپورٹ کا حصہ بنایا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں