The news is by your side.

Advertisement

عمران خان کی قندوز کے مدرسے پر بمباری کی مذمت

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے افغان صوبے قندوز کے مدرسے پر بمباری کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ معصوم بچوں کا قتل عالمی ضمیر کے چہرے پر طمانچہ ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے دو روز قبل افغان صوبے قندوز کے مدرسے پر ہونے والی بمباری کی سخت مذمت کی ہے۔

عمران خان نے کم سن بچوں سمیت بڑے پیمانے پر ہلاکتوں پر کرب و الم کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ معصوم بچوں کا قتل عالمی ضمیر کے چہرے پر طمانچہ ہے۔ دہشت گردی کے خلاف نام نہاد امریکی جنگ کا مکروہ چہرہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ واقعے سے خطے سمیت عالمی امن پر تباہ کن اثرات مرتب ہوں گے۔ اس واقعے نے ڈمہ ڈولہ سانحے کے زخم تازہ کر دیے ہیں۔ ڈمہ ڈولہ میں دینی مدرسے پر حملے کے بعد دہشت گردی بڑھی تھی۔

مزید پڑھیں: افغان صدر نے مدرسے پر حملے کی تحقیقات کا حکم دے دیا

عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ اس قسم کی شر انگیز کارروائیاں شدت کے اسباب مہیا کرتی ہیں۔ متاثرہ خاندانوں سے ہمدردی اور یکجہتی کا اظہار کرتا ہوں۔

خیال رہے کہ دو روز قبل افغان صوبہ قندوز کے ضلع دشت آرچی میں واقع مدرسے پر افغان فورسز کی جانب سے فضائی حملہ کیا گیا تھا۔

فورسز کے مطابق یہ حملہ طالبان کے تربیتی مرکز پر کیا گیا تھا جہاں انہیں طالبان کمانڈروں کی موجودگی کی اطلاع ملی تھی، تاہم بعد ازاں حملے میں بچوں اور عام شہریوں کی ہلاکت کی تصدیق ہوگئی۔

حملے میں 50 کے قریب افراد مارے گئے تھے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں