The news is by your side.

Advertisement

وزیر اعظم نے 1675 ارب روپے کے ترقیاتی بجٹ کی منظوری دے دی

لندن / اسلام آباد : وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف نے کہا ہے کہ قومی پیداوار میں مجموعی طور پر اضافہ ہوا ہے، اور آئندہ دوسال میں قومی پیداوار کا ہدف چھ سے سات فیصد ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے لندن سے اسلام آباد میں ہونے والے قومی اقتصادی کونسل کے اجلاس کی صدارت کے دوران بذریعہ ویڈیو لنک خطاب کرتے ہوئے کیا۔

وزیراعظم نوازشریف کی زیر صدارت قومی اقتصادی کونسل کے اجلاس میں 1675 ارب روپے کے ترقیاتی بجٹ کی منظوری دے دی گئی۔

وزیر اعظم نے اپنے خطاب میں آئندہ مالی سال کے بجٹ کے حوالے سے کہا کہ ایک سے آٹھ نمبر تک کے تمام آئٹم منظور کئے جاتے ہیں۔

اجلاس س خطاب کرتے ہوئے نوازشریف کا کہنا تھا کہ پاکستان کا مستقبل انتہائی روشن دیکھ رہاہوں ،صوبوں کی ترقی کیلئے تما م وسائل بروئے کار لائیں گے ،مجموعی قومی پیدوار میں مسلسل اضافہ ہورہاہے۔

انہوں نے کہا کہ گزشتہ تین سال میں جی ڈی پی کی شرح چار گنا ہو گئی ہے،رواں سال میں جی ڈی پی کی شرح 4.71 فیصد رہی ہے ،پاک چین اقتصادی راہداری مجموعی قومی پیدوار بڑھانے کی استطاعات رکھتی ہے اور یہ پاکستان کی معیشت کو مزید مضبوط کرے گی ۔

قومی اقتصادی کونسل کے اجلاس میں آئندہ مالی سال معاشی ترقی کا ہدف پانچ اعشاریہ سات فیصد رکھنے کی منظوری دی گئی۔ اجلاس میں افراط زر کی شرح 6 فیصد تک محدود رکھنے، زرعی ترقی کی شرح نمو کا ہدف 3.4 فیصد، لائیو سٹاک کی ترقی کی شرح کا ہدف 4 فیصد، ماہی پروری کے لیے شرح ترقی 3 اور جنگلات کیلیے 4 فیصد۔ آئندہ مالی سال صنعتی ترقی کا ہدف 7.6 فیصد رکھنے کی منظوری دی گئی۔

ان کا کہنا تھا کہ صحت کے مسائل کی وجہ سے میں اجلاس میں شرکت نہیں کر سکا۔ انشا اللہ جلد پوری قوم کے پاس وطن واپس لوٹوں گا۔

وزیراعظم نے کہا کہ میں پاکستان کا مستقبل بہت روشن دیکھ رہا ہوں۔ شاندار معاشی کارکردگی ہم نے مختصر مدت میں حاصل کی ہے۔

اس موقع پر وزرائے اعلیٰ سید قائم علی شاہ ، ثناء اللہ زہری ، پرویز خٹک،اور گورنر کے پی کے اقبال ظفر جھگڑا، قومی اقتصادی کونسل کے شرکاء نے وزیراعظم کی جلد صحت یابی کے لیے دُعا کی اور اپنی نیک خواہشات کا اظہار کیا۔

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں