The news is by your side.

Advertisement

پانیوں کے شہر وینس میں نصب کیے جانے والے انوکھے مجسمے

روم: اٹلی کے خوبصورت ترین پانیوں کے شہر وینس میں دیو قامت ہاتھوں کے خوبصورت مجسمے نہر پر نصب کردیے گئے۔

وینس کی آرسینل نہر پر نصب کیے جانے والے یہ ہاتھ مجسمہ سازی کی انوکھی جہت ہیں۔ 6 ہاتھوں کے یہ جوڑے باہم ایک دوسرے میں پیوست ہیں اور سیاحوں اور مقامی افراد کو اپنی جانب کھینچ رہے ہیں۔

اسے بنانے والا مجسمہ ساز لورینزو کوئن ہے، یہ وہی مجسمہ ساز ہے جس نے 2 سال قبل گرینڈ کنال پر بھی دیو قامت ہاتھ نصب کیے تھے۔

اس وقت ان ہاتھوں کو بنانے کا مقصد کلائمٹ چینج کی طرف توجہ دلانا تھا۔ جس مقام پر یہ ہاتھ نصب کیے گئے تھے وہاں 14 ویں صدی کا ایک تاریخی ہوٹل موجود تھا اور کوئن کا کہنا تھا کہ یہ ہاتھ دراصل علامتی طور اس ہوٹل کو ڈوبنے سے بچانے کی کوشش کر رہے ہیں۔

اب ان ہاتھوں کو بنانے کا مقصد محبت، یکجہتی اور دوستی کا پیغام دینا ہے۔

50 فٹ اونچے اور 65 فٹ چوڑے ان ہاتھوں کو وینس کی آرسینل نہر پر نصب کیا گیا ہے۔ کوئن کا کہنا ہے کہ 6 ہاتھوں کے جوڑے ذہانت، امید، مدد، یقین، دوستی اور محبت کی علامت ہیں۔

کوئن کہتا ہے کہ ذاتی طور پر اسے ہاتھوں کے مجسمے بنانا بہت پسند ہے، ’کیونکہ اشاروں کی زبان عالمی زبان ہے، اور ہم اطالوی ویسے بھی اپنے ہاتھوں سے گفتگو کرتے ہیں‘۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں