The news is by your side.

Advertisement

ممبئی میں پلاسٹک پر پابندی عائد

بھارت کے سب سے بڑے شہر ممبئی کی مقامی حکومت نے شہر بھر میں پلاسٹک مصنوعات کے استعمال پر پابندی عائد کردی۔ خلاف ورزی کرنے والوں کو بھاری جرمانہ ادا کرنا ہوگا۔

گو کہ بھارت کی دیگر ریاستوں میں بھی پلاسٹک کے استعمال کو روکنے کے لیے پابندیاں عائد کی گئی ہیں لیکن مہاراشٹر پہلی ریاست ہے جس نے ماحولیاتی تحفظ کے لیے پلاسٹک کے استعمال پر اتنے بڑے پیمانے پر پابندی عائد کی ہے۔

پابندی کے تحت شہر میں پلاسٹک بیگ، پلاسٹک کے (ڈسپوز ایبل) برتن اور دیگر پلاسٹک مصنوعات کا استعمال ممنوع قرار پاگیا ہے۔

حکام کے مطابق پہلی بار پابندی کی خلاف ورزی کرنے والوں پر 5 ہزار روپے جرمانہ عائد ہوگا، تاہم اگر کوئی شخص ایک بار سے زائد پابندی کی خلاف ورزی کرتا پایا گیا تو اس پر 25 ہزار روپے جرمانہ اور 3 ماہ کی قید کی سزا دی جائے گی۔

مہاراشٹر کے وزیر اعلیٰ کا کہنا ہے، ’ہم چاہتے ہیں کہ پلاسٹک سے بنے بیگ کا استعمال ذمہ دارانہ انداز سے کیا جائے۔ اسی لیے ہم نے ہر اس طرح کے پلاسٹک کے استعمال پر پابندی عائد کی ہے جسے دوبارہ استعمال کے قابل نہیں لایا جاتا‘۔

اس پابندی کو تحفظ ماحولیات کے لیے کام کرنے والے افراد نے سراہا ہے تاہم پلاسٹک کے کاروبار سے وابستہ افراد پریشانی کا شکار ہوگئے ہیں۔ بھارت میں اس وقت 9 ارب ڈالر مالیت کی پلاسٹک کی صنعت فعال ہے۔

پلاسٹک کی تباہ کاری کے بارے میں مزید مضامین پڑھیں


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں