The news is by your side.

Advertisement

نیب راولپنڈی نے سال 2020 میں کتنی ریکوری کی، تفصیلات منظر عام پر

اسلام آباد: قومی احتساب بیورو راولپنڈی نے سال دوہزار بیس کو تاریخی وصولیوں کا سال قرار دے دیا ہے۔

نیب راولپنڈی اس وقت ملک کی سیاست میں اہم مقام حاصل کرچکا ہے، میگا کرپشن اور سیاستدانوں کے خلاف اثاثہ جات کیسز کی سماعت کے زیادہ تر کیسز نیب راولپنڈی میں ہی زیر سماعت ہیں۔

سال دوہزار بیس میں نیب راولپنڈی نے کون کون سی اہم کامیابیاں حاصل کیں ہیں، ان کی تفصیلات کچھ یوں ہے۔

ایک سو چھیانوے ارب کی ریکارڈ ریکوری

نیب راولپنڈی کی جانب سے جاری بیان کے مطابق ایک سال کے دوران 196ارب سے زائد کی ریکوری کی گئیں، 42 ریفرنسز احتساب عدالت اسلام آبادمیں جمع کرائےگئے، 35افراد کو احتساب عدالتوں سے مختلف سزائیں سنائی گئی جبکہ اسی سال 58 کیسزمکمل کیےگئے۔

میگا کرپشن کیسز، ملزمان پر فرد جرم عائد

نیب راولپنڈی کی جانب سے جاری بیان کے مطابق جعلی اکاؤنٹس کیسز کی ڈی جی نیب راولپنڈی کی قیادت میں تحقیقات کی گئیں، کیسز میں اب تک15 ارب سے زائد کی وصولیاں کی جاچکی ہیں اور اربوں کی واپسی کے معاملات پائپ لائن میں ہیں۔

نیب راولپنڈی نے اپنے بیان میں بتایا کہ آصف زرداری ،فریال تالپو ر اورشرجیل میمن ضمانتوں پر ہیں، شاہد خاقان، مفتاح اسماعیل پر فرد جرم عائد ہو چکی ہے، توشہ خانہ، حریش ، جعلی اکاونٹس اور پارک لین میں فردجرم عائد کی گئی، ان کیسز میں یوسف رضا گیلانی، زرداری اور فریال تالپور سمیت دیگر پر فرد جرم عائد کی گئی۔

حکومتی وزیروں کے خلاف انکوائریاں

نیب کی جانب سے جاری بیان کے مطابق مضاربہ اسیکنڈل اور لکی علی اسیکنڈل کےاربوں عوام میں تقسیم کیےجاچکے ہیں، اس کے علاوہ حکومتی وزیر عامر کیانی اور نور الحق قادری کی انکوائری بھی زیر تفتیش ہیں۔

غیر ملکی ایجنسیوں کے ساتھ مشترکہ آپریشن

قومی احتساب بیورو نے مزید بتایا کہ نیب راولپنڈی نے برطانوی ، امریکی اور دیگر ایجنسیز کےساتھ بیرون ملک آپریشن کئے، یہ آپریشن نیب کی متاثر کن کارکردگی کے باعث عمل میں لائے گئے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں