The news is by your side.

Advertisement

رضوان نے ہدف پورا نہ ہونے کی وجہ بتا دی

سنچری میکر محمد رضوان نے آسٹریلیا کے خلاف کراچی ٹیسٹ میں 506 رنز کا ہدف پورا نہ ہونے کی وجہ بتا دی۔

کراچی ٹیسٹ میچ کے آخری روز آسٹریلیا کے 506 رنز کے ہدف کے جواب میں پاکستان ٹیم 7 وکٹوں پر 443 رنز بنائے اور میچ بچانے میں کامیاب رہی۔

ٹیسٹ کی خاص بات کپتان بابر اعظم کی شاندار 196 رنز کی اننگز اور نائب کپتان محمد رضوان کی 104 کی ناقابل شکست باری تھی۔

کراچی ٹیسٹ کے آخری روز کیا پلان تھا؟ بابر اعظم نے بتادیا

میچ کے اختتام پر گفتگو کرتے ہوئے محمد رضوان نے بتایا کہ بابراعظم کے ساتھ میچ کے درمیان میں بات چیت ہوتی رہی اور پلان بنایا کہ ہم ہدف پورا کرنے کی طرف جائیں مگر گیند پرانی ہو چکی تھی یہ سب ٹیسٹ کرکٹ میں چلتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ کوچ نے سادہ سا پلان دیا تھا کہ یہ سارا بہادری کا کام ہے سیشن بائے سیشن کھیلنا اور جیسے جیسے میچ اختتام کی طرف جاتا ہے دباؤ بڑھتا جاتا ہے لیکن دباؤ اپنے اوپنر نہیں لیا خود کو ریلکس رکھا اور جو ہو سکتا تھا وہ کیا۔

رضوان کا کہنا تھا کہ نمبر ون ٹیم کے خلاف پانچ سیشن کھیلنا بڑی بات ہے اس کارکردگی سے ٹیم نے آگے بڑھنا ہے آسٹریلوی بولنگ ذہن میں تھی کہ وہ کم بیک کریں گے جس سے بہت کچھ سیکھنے کو ملا کسی بھی وقت ہم ہمت نہیں ہارے ڈٹ کر کھیلتے رہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں