The news is by your side.

روس ایران کا ادائیگی نظام سے متعلق اہم قدم

ماسکو: روس اور ایران کے درمیان ادائیگی کے نظام کے انضمام کے تکنیکی پہلوؤں پر ٹھوس معاہدے طے پا گئے۔

تفصیلات کے مطابق روس اور ایران نے ادائیگی نظام سے متعلق اہم معاملات طے کر لیے، روسی ادائیگی کے نظام ’میر‘ کو جلد ہی ایرانی سسٹم ’شیتاب‘ کے ساتھ منسلک کر دیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق بدھ کو روسی وزیر خارجہ سرگئی لاوروف اور ایرانی ہم منصب حسین امیر عبداللهیان کے درمیان ماسکو میں ایک اہم ملاقات ہوئی۔

ملاقات کے بعد پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے روسی وزیر خارجہ نے کہا روسی ادائیگی کے نظام کو جلد ہی ایرانی نظام شیتاب کے ساتھ ضم کر دیا جائے گا۔

پابندیوں کو غیر مؤثر کرنے کے لیے روسی ادائیگی نظام میں 4 دیگر ممالک کی شمولیت کا امکان

لاوروف نے کہا کہ روسی میر سسٹم اور ایرانی شیتاب سسٹم کے انضمام اور باہمی استعمال کے حوالے سے مرکزی بینکوں کی سطح پر ٹھوس مذاکرات جاری ہیں۔

انھوں نے کہا کہ ہم نے اس سلسلے میں جولائی میں بات چیت کر کے ایک حکمت عملی تیار کرنے کا فیصلہ کیا تھا، اب مجھے یقین ہے کہ یہ معاملہ جلد عملی صورت اختیار کر لے گا۔

اس موقع پر ایرانی وزیر خارجہ نے بتایا کہ روس کے ساتھ ادائیگی کے نظام کے انضمام کے تکنیکی پہلوؤں پر ٹھوس معاہدے طے پا گئے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں