The news is by your side.

Advertisement

پنجاب بجٹ اجلاس سے قبل اپوزیشن کو بڑا دھچکا

لاہور: پنجاب کے بجٹ سے قبل نون لیگ اور پی پی کے ارکان اسمبلی نے وزیراعلیٰ پنجاب سے ملاقات کرتے ہوئے انہیں مکمل تعاون کی یقین دہانی کرادی ہے۔

وزیراعلیٰ پنجاب نے پی ٹی آئی کے بعد اپوزیشن ارکان سے ملاقاتیں شروع کردیں ہیں، عثمان بزدار سے مسلم لیگ ن اورپیپلزپارٹی کے اراکین صوبائی اسمبلی نے آج ملاقات کی، ملاقات کرنے والوں میں میاں جلیل احمد شرقپوری، چوہدری اشرف علی انصاری، محمد غیاث الدین، محمد فیصل خان نیازی، رئیس نبیل احمد، غضنفر عباس ، اظہر عباس چانڈیا ، سید عباس علی شاہ، طاہربشیر چیمہ، یونس انصاری اور مسعود مجید شامل تھے۔

وزیراعلیٰ پنجاب نے اراکین سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میرے دروازے سب کے لئےکھلےہیں، صوبےکی تاریخ میں ترقیاتی بجٹ میں ریکارڈ اضافہ کیاجارہاہے، تعلیم،صحت،زراعت، انفراسٹرکچر کےلئےزیادہ فنڈز مختص کیےجائیں گے اور ہرضلع کےلیے علیحدہ ترقیاتی پیکیج بنایاگیاہے، کسی ضلع کی حق تلفی نہیں ہونے دیں گے۔

سردار عثمان بزدار نے کہا کہ سازشیں کرنے والوں کی منفی سیاست ہمیشہ کےلئے دفن ہوچکی، پی ڈی ایم کی منفی سیاست اپنی موت آپ مر چکی ہے،مستردشدہ عناصرکی انتشارکی سیاست کوعوام نےردکردی، اب افراتفری نہیں بلکہ عوام کی خدمت کی سیاست چلےگی، نئےپاکستان میں کرپشن اورکرپٹ عناصرکی کوئی گنجائش نہیں، تنقید کی پرواہ کیےبغیرعوامی خدمت کےسفر کو مزیدتیز کرینگے۔

عثمان بزدار نے کہا کہ پی ڈی ایم کاجوحشرہواہےوہ سبق آموزبھی ہے، اپوزیشن کیجا نب سےقوم کوتقسیم کرنےکی کوشش ناکام رہی،عوام باشعورہیں ،کرپٹ عناصرکے جھانسے میں نہیں آئیں گے۔

ملاقات میں اراکین اسمبلی نے شاندار اقدامات تجویز کرنےپر وزیراعلیٰ کے ویژن کو سراہا، اراکین نے سردار عثمان بزدار کی قیادت پر مکمل اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ہم آپ کےساتھ ہیں۔

واضح رہے کہ پنجاب کا 26سو ارب سے زائد کا بجٹ کل پیش کیا جائے گا، بجٹ ٹیکس فری ہوگا جب کہ ترقیاتی بجٹ کا حجم 560 ارب روپے رکھنے کی تجویز دی گئی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں