The news is by your side.

Advertisement

بشار الاسد کی سوچی میں روسی صدر پیوٹن سے ملاقات

ماسکو: جنگ سے تباہ حال ملک شام کے صدر بشار الاسد روس پہنچے جہاں انہوں نے اپنے روسی ہم منصب سے ملاقات کی، ملاقات بحیرہ اسود کے سیاحتی مقام سوچی میں ولادی میر پیٹون کی رہائش گاہ پر ہوئی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق بشار الاسد کا کہنا تھا کہ ملک سے دہشت گردی کے خاتمے کی کوششوں میں کامیابی حاصل ہورہی ہے، جس کی وجہ سے سیاسی عمل کے راستے ہموار ہورہے ہیں۔

روسی صدر پیوٹن کے ترجمان کا کہنا ہے کہ ملاقات میں شامی صدر نے روسی رہنما کو اقوام متحدہ اپنا وفد بھیجنے سے متعلق فیصلے سے آگاہ کیا جہاں وہ شامی دستور میں اصلاحات سے متعلق مذاکرات میں شرکت کرے گا۔

شامی صدر کے ترجمان کے مطابق سوچی میں ہونے والی اسد، پیوٹن ملاقات میں دونوں رہنماؤں نے باہمی دلچسپی کے کئی امور پر تبادلہ خیال کیا، اس موقع پر شام میں ہونے والی سیاسی و فوجی صورتحال بھی زیر بحث آئی۔

دونوں رہنماؤں نے شام میں روس کی جانب سے معاشی تعاون اور بڑھتی ہوئی روسی سرمایہ کاری سے متعلق بھی بات کی، شام میں سات برس سے جاری خانہ جنگی کے دوران روس اتحادی کے طور پر بشار الاسد حکومت کا ساتھ دے رہا ہے۔

واضح رہے کہ 2015 میں روس نے شامی فوجیوں کی مدد کی خاطر فضائی حملوں میں شرکت کی تھی جس کے بعد سے صورتحال یکسر تبدیل ہوگئی تھی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات  کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں