site
stats
عالمی خبریں

راہول گاندھی کومدھیہ پردیش سے حراست میں لے لیا گیا

نئی دہلی: کانگریس کے نائب صدر راہول گاندھی کو مدھیہ پردیش میں داخل ہونے پرحراست میں لےلیا گیا ہے وہ کسان تحریک میں پولیس کی فائرنگ سے ہلاک ہونے والے کسانوں کے اہلِ خانہ سے تعزیت کے لیے مدھیہ پردیش جا رہے تھے۔

تفصیلات کے مطابق بھارت کی اپوزیشن جماعت کانگریس کے نائب صدر راہوکل گاندھی کو مدھیہ پردیش کی سرحد پر اس وقت حراست میں لے لیا گیا جب وہ پولیس فائرنگ میں ہلاک ہونے والے کسانوں کے اہل خانہ سے تعزیت کرنے کے لیے مدھیہ پردیش میں داخل ہو رہے تھے۔

اس موقع پر کانگریش کے نائب صدر اورسابق بھارتی وزیراعظم راجیو گاندھی کے صاحبزادے راہول گاندھی نے کہا کہ میرا مقصد احتجاج پر بیٹھے کسانوں کی داد رسی اور پولیس فائرنگ سے ہلاک ہونے والے کسانوں کے اہل خانہ سے ہمدردی کا اظہار کرنا تھا جس کا مجھے بھارتی آئین اور قانون مکمل اجازت بھی دیتا ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ایک پیغام میں انہوں نے کہا کہ میں کسانوں کی مشکلات کو سننے اور ان کے لیے حل کے لیے اپنا کردار ادا کرنا چاہتا ہوں کیوں کہ کسان اس ملک کی ریڑھ کی ہڈی اور بنیادی ستون ہیں ان پر فائرنگ اور ریاستی جبر نا قابل قبول ہے۔

خیال رہے بھارتی ریاست مدھیہ پردیش میں حکومتی پالیسیوں کے خلاف 4000 سے زائد کسان احتجاج پرہیں، مودی سرکار نے اس احتجاج کوریاستی جبر سے کچلنے کی کوشش کی جس کے نتیجے میں 5 کسان اپنی جان کی بازی ہار گئے جس کے بعد یہ احتجاج ملک کے طورل و عرض میں پھیل گیا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top