The news is by your side.

Advertisement

30مارچ سے پہلے دونوں چوروں پرجھاڑو پھر جائے، شیخ رشید کی ایک اور پیش گوئی

اسلام آباد : وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے کہا ہے کہ30مارچ سے پہلے دونوں چوروں پرجھاڑو پھر جائے گا، عوام نے عمران خان کو کرپٹ لوگوں کو زنجیریں ڈالنے کیلئےووٹ دیئے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے اے آر وائی نیوز کے پروگرام سوال یہ ہے میں میزبان ماریہ میمن سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا، شیخ رشید نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان ڈیلیور کرنا چاہتے ہیں لیکن حالات و اقعات نے ان کے ہاتھ باندھ رہے ہیں، وہ بہت محنت کررہے ہیں ،ہمیں لٹا پٹا خزانہ ملا، پاکستان کے پاس عمران خان کےعلاوہ کوئی چوائس نہیں، ان کی کامیابی کی اس ملک کی ضرورت ہے۔

وزیر ریلوے کا کہنا تھا کہ خواجہ سعد رفیق تو کمیشن کھانے آئے تھے، انہوں نے اربوں روپے کی کرپشن کی، اب انہوں نےچخ چخ کی تو نیب میں اصل کھاتا لےجاؤں گا، نیب کو بتاؤں گا کہ کس کس نے اور کہاں کہاں کمیشن کھایا ہے۔

پی اے سی کی چیئرمین شپ سے متعلق ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ہم نے دودھ کی رکھوالی پر بلے کو بٹھا دیا ہے، اب شہبازشریف اپنے پروڈکشن آرڈر خود جاری کرے گا، وہ اب ڈاکٹرز کی رپورٹ لائے گا کہ مجھےکھلی فضا میں رکھو، پتہ نہیں خان صاحب کی کیا مجبوری تھی کہ شہبازشریف کو چیئرمین پی اے سی بنادیا۔

پبلک اکاؤئنٹس کمیٹی کی چیئرمین شپ پر میں نےاحتجاج کیا ہے، شہبازشریف زیرعتاب نہیں زیرخطاب ہے، یہ لوگ جیل میں نہیں ہیں بلکہ پنکنک منارہے ہیں۔

شیخ رشید احمد کا مزید کہنا تھا کہ شہبازشریف اور سعدرفیق کے پروڈکشن آرڈر غلط ہوئے، ریمانڈ کےدوران کسی کے پروڈکشن آرڈرجاری نہیں ہوسکتے، جس جس کا کیس نیب میں چل رہاہے وہ یہی کہہ رہا ہے کہ نیب کا قانون تبدیل کرو، نیب زدہ شہباز شریف کو وہی مراعات حاصل ہیں جو شیخ رشید کو ہیں، میں پروڈیکشن آرڈرپراسپیکرسےاحتجاج کروں گا۔

وزیر ریلوے کا مڈٹرم الیکشن کے حوالے سے کہنا تھا کہ عمران خان سادہ آدمی ہے، سیدھی بات کردی، مڈٹرم الیکشن ہوجائیں تو کوئی قیامت نہیں آجائے گی، میں بھی حامی ہوں کہ چار سال بعد الیکشن ہوجائیں، ہم کارکردگی دکھائیں گے توعوام ہمیں دوبارہ لائیں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں