The news is by your side.

Advertisement

بالی ووڈ کے ایسے 8 اداکار جو والدین کی جگہ حاصل نہ کرسکے

بالی ووڈ کے کچھ ایسے ستارے جو کافی عرصہ بالی ووڈ میں کام کرنے کے بعد بھی اپنے والدین جیسی شہرت حاصل نہ کرسکے۔

بالی ووڈ میں پاؤں جمانے کے لیے کسی گاڈ فادر ہونا ضروری ہے اور جن کے والدین فلم انڈسٹری سے ہوں تو ان کے کریئر کی راہ قدرے آسان ہو جاتی ہے۔

اس طرح کے خیالات کا عموماً اظہار کیا جاتا ہے لیکن بالی ووڈ میں کئی ایسے والدین بھی ہیں جو فلم انڈسٹری کی معروف شخصیات میں شمار ہوتے ہیں لیکن ان کے بچوں کو وہ کامیابی نصیب نہ ہو سکی جو انھوں نے حاصل کی تھی۔

بالی ووڈ کے ایسے اداکار جو اپنے والدین طرح شہرت حاصل نہ کرسکے ان کی فہرست مندرجہ ذیل ہیں۔

 

اودے چوپڑہ

uday
بالی ووڈ کے سب سے بڑے کنگ میکر یش راج چوپڑہ جنہوں نے امیتابھ بچن،شاہ رخ خان جیسے کئی منجھے ہوئے اداکار بالی ووڈ کو دئیے لیکن اپنے بیٹے اودے چوپڑہ کو بطور ہیرو مقبولیت دلانے میں ناکام رہے ۔ یش چوپڑہ  نے اپنے بیٹے کو  اپنی ہوم پروڈکشن میں بننے والی ملٹی اسٹاررموویز میں ہی کاسٹ کیا جس میں رسک کا عنصر نہیں تھا۔

اودے چوپڑہ کو ایک کامیاب فلم ’محبتیں ‘ میں متعارف کرایا گیا جس کی سٹار کاسٹ میں امیتابھ بچن،شاہ رخ خان ،ایشوریہ رائے کے علاوہ کچھ نئے چہرے اور امریش پوری ، انوپم جیسے منجھے ہوئے اداکار شامل تھے ۔اس فلم سے اودے کو بہترین نئے اداکار کا ایوارڈ تو ملا لیکن اس کے بعد بھی انہیں سولو ہیرو کے طور پر کوئی فلم نہیں ملی۔

حرمین باجوہ

Herman

بالی ووڈ فلم لو اسٹوری 2050 سے فلم انڈسٹری میں قدم رکھا، حرمین باجوہ بالی ووڈ کے ڈائریکٹر ہررے باجوہ کے صحابزادے ہیں ۔

بالی ووڈ کے اداکار ہرتھک روشن کے ہم شکل حرمین باجوہ ان دنوں سکرین سے غائب ہیں ، تاہم ان کی فلم نگری سے دوری کی وجہ سامنے نہیں آئی۔

لو سنہا

Luv
بالی ووڈ کے مشہور لیجنڈری اداکار شتروگھن سنہا کے بیٹے لو سنہا نے سنہ 2010 میں فلم ’صدیاں‘ میں کام کیا لیکن ان کو کوئی توجہ نہیں مل پائی البتہ ان کی بیٹی سوناکشی سنہا نے فلم ’دبنگ‘ کے بعد پیچھے مڑ کرنہیں دیکھا۔

لو سنہا کی فلم صدیاں سے کوئی پزیرائی حاصل نہ ہوئی حالانکہ اس فلم میں ان ساتھ لیجنڈری اداکار رشی کپور ، ریکھا اور ہیما مالنی نے بھی اداکار کے جوہر دیکھائے تھے۔

تشار کپور

Tushar
مشہور اداکار جيتیندر کی بیٹی ایکتا کپور نے بطور پروڈیوسر ٹی وی اور فلموں میں اپنا سکہ جمایا لیکن ان کے بیٹے تشار کپور کو اداکار کے طور پر زیادہ مقام حاصل نہیں ہو سکا۔

تشار کپور نے فلم ’مجھے کچھ کہنا ہے‘ سے سنہ 2001 میں اپنے کریئر کا آغاز کیا تھا، تشار کپور کئی فلمیں کرنے کے بعد بھی رہیں۔

جیکی بھنگنانی

Jacky
بالی ووڈ کے ممتاز پروڈیوسر واشو بھنگنانی کے صحابزادے جیکی بھنگنانی بھی اپنے آپ کو بالی ووڈ میں منوا نہیں سکے، جیکی بھنگنانی صرف دو ہی فلمیں ’کل کس نے دیکھا‘ اور ینگستان میں جلوہ گر ہو سکے ۔

ایشا دیول

Esha

بالی ووڈ کی جوڑی ہیما مالنی اور دھرمیندر کی بیٹی ایشا دیول نے ماں کے نقشے قدم پر چلتے ہوئے فلموں میں اداکاری کرنے کا فیصلہ کیا۔

ایشا فلم انڈسٹری میں اپنی ماں کی طرح ’ڈريم گرل‘ نہیں بن سکیں۔

ان کا کریئر سنوارنے کے لیے ہیما مالنی نے ’ٹیل می او گاڈ‘ فلم کی ہدایت بھی کی لیکن اس کوشش سے بھی ایشا دیول کا کریئر روشن نہیں ہوسکا۔

 

فردين خان

Fardeen
’قربانی،‘ ’دھرماتما،‘ ’جانباز‘ جیسی زبردست فلمیں بنانے والے اداکار اور پروڈیوسر ڈائریکٹر فیروز خان نے اکلوتے بیٹے فردين خان کو ’پریم اگن‘ فلم سے لانچ کیا گیا تھا۔

فردين نے رام گوپال ورما کی کچھ فلموں میں کام کیا جن میں انھیں کامیابی بھی ملی لیکن والد کی موت کے بعد ان کے فلمی سفر پر ایک قسم کا بریک سا لگ گیا۔

ابھیشک بچن

Bachan

امیتابھ بچن جو کہ کسی تعارف کے محتاج نہیں، ان کے بیٹے ابھیشک بچن جو کہ پچھلے 13سال سے فلم انڈسٹری سے وابستہ ہیں اور انہوں نے چالیس کے قریب فلموں میں بطور ہیرو کام کیا ہے لیکن ان فلموں میں ہٹ فلموں کی تعداد بہت کم ہے ۔

امیتابھ بچن نے ذاتی طور پر اپنے بیٹے کو صف اول کے اداکاروں میں کھڑا کرنے کی بہت کوشش کی لیکن کامیاب نہ ہو سکے ۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں