ماڈل ٹاؤن رپورٹ عام ہونے سے نظامِ انصاف مستحکم ہوگا، طاہرالقادری tahir ul qadri
The news is by your side.

Advertisement

ماڈل ٹاؤن رپورٹ عام ہونے سے نظامِ انصاف مستحکم ہوگا، طاہرالقادری

لاہور : سربراہ پاکستان عوامی تحریک ڈاکٹر طاہر القادری نے کہا ہے کہ ماڈل ٹاؤن رپورٹ عام ہونے سے نظامِ انصاف مستحکم ہوگا اور مظلوموں کا ریاست پر اعتماد بحال ہو گا.

وہ لاہورمیں اپنے مرکزی دفتر میں پارٹی رہنماؤں سے ٹیلی فونک خطاب کر رہے تھے، علامہ طاہر القادری نے کہا کہ فاضل بینچ کا نجفی کمیشن رپورٹ طلب کرنا اہم پیشرفت ہے جس کا خیرمقدم کرتے ہیں.

طاہر القادری نے کہا ہے کہ رپورٹ عام ہونے سے قاتلوں کے چہروں سے نقاب ہٹے گا اور ملزمان کو کیفر کردار پہنچنے پر مظلوموں کا نظام عدل پر اعتماد بڑھے گا.

سربراہ پاکستان عوامی تحریک نے سوال اُٹھایا کہ جب پاناما پیپرز کے ملزم کو اہم دستاویزات والیم 10 تک رسائی مل سکتی ہے اور وہ خفیہ ڈاکومنٹس بھی پڑھ سکتے ہیں تو پڑھ سکتے ہیں ماڈل ٹاؤن کے مظلوم لواحقین اور ورثاء جسٹس باقر نجفی رپورٹ کیوں نہیں حاصل کرسکتے؟

علامہ ڈاکٹر طاہرالقادری نے کہا ہے کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن کے ملزمان قانون کی گرفت سے آزاد کھلے عام پِھر رہے ہیں لیکن انہیں کوئی پابند سلاسل کرنے والا نہیں اور مظلوموں کی کہیں سنوائی نہیں ہورہی ہے.


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں