The news is by your side.

Advertisement

ٹویٹر سے آمدنی حاصل کرنا ممکن

نیویارک: سماجی رابطے کی ویب سائٹ اور مائیکربلاگنگ پلیٹ فارم ٹویٹر نے بھی صارفین کو پیسے کمانے کی سہولت فراہم کردی۔

ٹویٹر کی جانب سے یہ سہولت آزمائشی طور پر فی الحال مخصوص صارفین کو مشروط طور پر فراہم کی گئی ہے، جس کے تحت اب ٹویٹر کے ذریعے بھی کمائی ممکن ہوسکے گی۔

ٹویٹر کی جانب سے کمانے کی یہ سہولت فی الحال امریکا میں متعارف کرائی گئی ہے، جس کی بنیادی شرط فالوورز کی تعداد زیادہ ہونا ہے۔

مائیکروبلاگنگ ویب سائٹ کی جانب سے بھی فیس بک، یوٹیوب اور انسٹاگرام کی طرح مونیٹائزیشن کا آپشن متعارف کرایا گیا ہے۔

مزید پڑھیں: قابل اعتبار خبروں تک رسائی کے لیے ٹویٹر کا ایک اور اقدام

ٹیکنالوجی پر نظر رکھنے والے ماہرین کا ماننا ہے کہ امریکا میں اگر اس سہولت کی آزمائش کامیاب ہوگئی تو اسے دوسرے ممالک میں بھی فراہم کردیا جائے گا۔

ٹویٹر سے کمائی کیسے ممکن ہوگی؟

کمپنی نے اس پروگرام کو ’سپر فالوز‘ کا نام دیا، جس کا آغاز یکم سمتبر سے شروع کیا گیا۔

ٹویٹر کی جانب سے دیگر شرائط عائد کی گئیں اُن میں صارف کی عمر کم از کم اٹھارہ سال، اکاؤنٹ کم از کم تین ماہ پرانا اور فالوررز کی تعداد 10 ہزار سے زائد ہونے کے ساتھ ماہانہ 25 ٹویٹس ہونا لازمی ہے۔

ان تمام شرائط پر پورا اترنے والے صارف کو مخصوص ٹویٹس پر 2.99 ڈالرز سے چار اعشاریہ 99 ڈالرز تک رقم دی جائے گی، ابتدائی مرحلے میں ماہانہ دس ڈالرز تک رقم کمائی جاسکے گی۔

کمپنی نے وضاحت کی کہ پچاس ہزار ڈالرز کی کمائی پر تین فیصد جبکہ اس سے زیادہ آمدنی پر 20 فیصد حصہ پالیسی کے تحت کمپنی لازمی لے گی۔

یہ بھی پڑھیں: ٹویٹر نے اکاؤنٹ تصدیق کی درخواست مسترد ہونے والے کو خوش خبری سنادی

ابتدائی طور پر اس پروگرام کو صرف آئی فون صارفین ہی استعمال کرسکیں گے، اس پروگرام سے پیسہ کمانے والوں کو عملاً اپنی کمائی ہوئی رقم کا صرف 65 فیصد حصہ ہی ملے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں