رومانوی فلمیں دیکھنا اوران میں کام کرنا اچھا لگتا ہے، عروہ حسین
The news is by your side.

Advertisement

رومانوی فلمیں دیکھنا اوران میں کام کرنا اچھا لگتا ہے، عروہ حسین

کراچی : پاکستانی اداکارہ عروہ حسین کا کہنا ہے کہ مجھے رومانوی فلمیں دیکھنا اور ایسی فلموں میں کام کرنا اچھا لگتا ہے،عید پر آنے والی دونوں فلموں سے مجھے بہت اچھی امیدیں ہیں، ان فلموں میں بہترین کاسٹ ہے ہم سب نے مل کر بہت محنت سے کام کیا ہے۔

یہ بات انہوں نے برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی اردو کو دیئے گئے ایک انٹرویومیں کہی، ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ فلم پنجاب نہیں جاؤں گی میں کام کرکے مجھے بہت مزہ آیا۔

انہوں نے بتایا کہ میرا تعلق بھی پنجاب سے ہے اور پنجاب کی خاص بات یہ ہے کہ یہاں کے لوگ بہت مہمان نواز اور پیار کرنے والے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ میں کھانے پینے کی اتنی زیاددہ شوقین نہیں ہوں میں سمجھتی ہوں کہ انسان کا بہترین وزن وہی ہوتا ہے جس میں وہ آسانی اور خوشی محسوس کرے، اور ویسے بھی دوسروں کی باتوں پر اتنا دھیان بھی نہیں دینا چاہیے۔

اپنی شادی کے حوالے سے عروہ حسین کا کہنا تھا کہ موبائل کیمرا کے دور میں کسی کو تصاویر یا ویڈیوز بنانے سے نہیں روکا جاسکتا، شادی کی ویڈیوز میں جو کچھ تھا وہ سب حقیقت تھا کیونکہ ہم نے اسے پبلک نہیں کرنا تھا بعد میں یہ سب چیزیں سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئیں، وہ سب کچھ دکھاوے کے لیے نہیں تھا وہ صرف میرے اپنے لیے تھا۔


مزید پڑھیں: فلم ’پنجاب نہیں جاؤں گی‘ کا آفیشل ٹریلر جاری


انہوں نے کہا کہ مجھے فلموں میں لڑکیوں کا نمائشی کردار بالکل پسند نہیں ہے، مجھے پچپن سے ہی رومینٹک فلمیں پسند ہیں۔

عروہ نے بتایا کہ فرحان کے ساتھ میری دوستی پچھلے تین سال سے تھی لیکن جب اس نے مجھے پرپوز کیا تو یہ میرے لیے سرپرائز تھا اور میں تین سیکنڈ کے اندر ہی ہاں کردی۔


مزید پڑھیں: آؤ لے کرچلیں، عروہ حسین کا پہلا گانا ریلیز


واضح رہے کہ عروہ حسین کی دو فلمیں عیدالاضحیٰ پر ریلیز ہوں گی، جس میں فہد مصطفیٰ کے ساتھ نامعلوم افراد ٹو اور دوسری فلم پنجاب نہیں جاؤں گی، اس فلم میں ہمایوں سعید اور مہوش حیات ساتھی اداکاروں میں شامل ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں