The news is by your side.

Advertisement

ازبک صدر اسلام کریموف طویل علالت کے بعدانتقال کرگئے

تاشقند : ازبکستان کے صدراسلام کریموف طویل علالت کے بعد انتقال کرگئے انہیں برین ہیمرج ہوا تھا۔

بین الااقوامی میڈیا کے مطابق ازبکستان کے صدر اسلام کریموف جو برین ہمیرج کے باعث شدید علیل تھے،آج طویل علالت کے بعد خالق حقیقی سے جا ملے۔

برطانوی خبر رساں ادارے رائٹرز کے مطابق 78 سالہ ازبک صدر کے انتقال کی تصدیق تین ازبک سفارتی ذرائع نے کردی ہے،ازبک صدر اپنی زندگی میں کسی مضبوط جانشین کا تعین نہیں کر سکے تھے۔

واضح رہے ازبکستان کے مقامی میڈیا پر چلنے والے حکومتی بیان میں بتایا گیا تھا کہ ملک کے بیمار صدر اسلام کریموف کی حالت نہایت تشویش ناک ہے جب کہ ازبک صدر کی بیٹی نے بتایاتھا کہ انھیں برین ہیمرج کے باعث اسپتال میں منتقل کیا گیا تھا۔

فالج کے دورے کے بعد ازبک صدر اسلام کریموف کو ہفتے کے روز اسپتال کے انتہائی نگہداشت کے وارڈ میں داخل کروایا گیا تھا تا ہم اُن کی بیماری سے متعلق زیادہ تفصیلات فراہم نہیں کی گئی تھیں۔

اسپتال انتظامیہ نے بھی محض یہ بات بتانے پر اکتفا کیا تھا کہ ازبک صدر کی حالت 24 گھنٹوں میں خراب تر ہوتی گئی ہے تا ہم اب حزب اختلاف کے رہنماؤں کا کہنا ہے کہ 78 سالہ صدر کریموف انتقال کر چکے ہیں۔

واضح رہے کریموف نے 31 اگست 1991ء کو ازبکستان کو ایک آزاد ملک قرار دے دیا اور پہلے ازبک انتخابات میں 86٪ ووٹ لے کے پہلے صدر منتخب ہوگئے تھے۔

ازبکستان آئين کے مطابق ایک شخص دو بار ہی صدر منتخب ہو سکتا ہے تا ہم انہوں نے آئين میں ترمیم کر کے 2015 میں انتخابات میں حصہ لے کر دوبارہ صدر منتخب ہوئے تھے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں