The news is by your side.

Advertisement

خیبر پختونخوا بجٹ اجلاس میں ایک ‘فرینڈلی ہاتھا پائی’ کی ویڈیو سامنے آ گئی

پشاور: خیبر پختونخوا بجٹ اجلاس میں ایک ‘فرینڈلی ہاتھا پائی’ کی ویڈیو سامنے آ گئی ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق گزشتہ روز خیبر پختون خوا اسمبلی میں آئندہ مالی سال 2022-23 کا بجٹ پیش کر دیا گیا ہے، دل چسپ امر یہ ہے کہ اجلاس میں حکومت اور اپوزیشن ارکان کے مابین جھڑپ تو نہیں ہوئی لیکن حکومتی رکن کی اپنے ہی اتحادی کے ساتھ گھمسان کا رن پڑ گیا۔

کے پی اسمبلی میں جب صوبائی وزیر خزانہ تیمور سلیم جھگڑا آئندہ مالی سال کا بجٹ پیش کر رہے تھے، عین اسی وقت ایز لابی جو کہ عموما حکومتی ارکان کے استعمال میں ہوتی ہے، وہاں 2 اراکین اسمبلی آپس میں الجھ پڑے۔

ویڈیو کے مطابق اراکین ایسے الجھے کہ پھر وہاں موجود دیگر اراکین اسمبلی اور اسمبلی اسٹاف کے لیے انھیں چھڑانا مشکل ہو گیا۔

خیبر پختونخواہ بجٹ: سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 16 فیصد اضافے کا اعلان

ذرائع کے مطابق کے پی اسمبلی میں کوہستان سے تعلق رکھنے والے ق لیگ کے اکلوتے ممبر اور پارلیمانی لیڈر مفتی عبید الرحمٰن اپنے ہی اتحادی پی ٹی آئی کے رکن دیدار خان، جو کہ کولئی پالس سے تعلق رکھتے ہیں، کے ساتھ ضلع میں کلاس فور کی نوکری پر الجھے تھے۔

بات بڑھتے بڑھتے باقاعدہ لڑائی تک پہنچ گئی تھی، جس میں لاتوں اور گھونسوں کے آزادانہ استعمال کے ساتھ ساتھ غیر پارلیمانی الفاظ کا بھی بھرپور استعمال کیا گیا۔

لڑائی لابی کے اندر ہونے کی وجہ سے نہ تو ڈپٹی اسپیکر کو پتا چلا اور نہ ہی اس کا علم ایوان میں موجود وزیر اعلیٰ خیبر پختون خوا محمود خان کو ہوا، جب کہ اس وقت لابی میں موجود اسمبلی کے دیگر اراکین اور اسٹاف کوشش بسیار کے بعد دونوں اراکین کو قابو کرنے میں کامیاب ہوئے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں