The news is by your side.

Advertisement

مسجد میں پولنگ اسٹیشن بنانے کا فیصلہ واپس، مسلمانوں کا احتجاج

واشنگٹن: امریکی صدارتی انتخابات میں ایک مسجد میں پولنگ اسٹیشن بنانے کا فیصلہ واپس لئے جانے پر مسلم کمیونٹی نے احتجاج کا فیصلہ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق امریکی ریاست فلوریڈا میں صدارتی انتخابات کیلئے ایک مسجد کو پولنگ اسٹیشن بنانے کا فیصلہ واپس لئے جانے پر مختلف حلقوں کی جانب سے شدید مذمت کی جارہی ہے جبکہ مسلم کمیونٹی نے بھی اس فیصلے پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔

پام بیچ کاؤنٹی میں سن 2000 میں تعمیر کئے جانے والے اسلامک سینٹر کو کچھ ماہ قابل ایک نوٹی فیکیشن کے ذریعے سینٹر کو پولنگ اسٹیشن کے طور پر استعمال کرنے کی درخواست کی گئی تھی جس پر مسلم کمیونٹی نے خوشی کا اظہار کیا۔

انتظامیہ کے مطابق کچھ غیر مسلم ووٹرز نے اس فیصلے کی مخالفت کی اورانتظامیہ کو کہا کہ وہ مسجد میں جانے سے خوفزدہ ہیں جبکہ بعض نے تو ووٹنگ روکنے کی دھمکیاں بھی دیں جس کے بعد مسجد کو پولنگ اسٹیشن بنانے کا فیصلہ واپس لے لیا گیا۔

مسلمانوں کا موقف ہے کہ انتظامیہ کا فیصلہ امریکا میں بڑھتی ہوئی نفرت اور تعصب کو فروغ دے گا جبکہ اس حوالے سے مسلمان اپنا بھرپور احتجاج ریکارڈ کرائیں گے۔

پام بیچ کاؤنٹی میں چرچ سمیت دیگر مذاہب کی پچانوے عبادت گاہوں کو پولنگ سٹیشن قرار دیا گیا ہے اور اسلامک سینٹر کو اس فہرست سے نکالے جانے پر مسلم کمیونٹی نے انتظامیہ سے فیصلے پر نظر ثانی کی درخواست کی ہے۔

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں