The news is by your side.

Advertisement

ویلنگٹن: وزیر اعظم کو پارلیمنٹ سے باہر جانے کا حکم

ویلنگٹن: نیوزی لینڈ کے وزیر اعظم کو اس وقت شدید شرمندگی کا سامنا کرنا پڑا جب پارلیمنٹ میں اسپیکر نے انہیں باہر جانے کا حکم دے دیا۔ پارلیمنٹ میں اس وقت پاناما پیپرز کے حوالے سے بحث جاری تھی۔

وزیر اعظم جان کی کو اس سے قبل بھی اپوزیشن لیڈر کی حیثیت سے کئی بار اجلاس سے باہر بھیجا جا چکا ہے تاہم وزیر اعظم بننے کے بعد یہ پہلی بار ہے۔ اسپیکر نے انہیں اپنی تقریر ختم کر کے سیٹ پر بیٹھنے کو کہا اور ان کا مائیک بند کردیا گیا، لیکن وزیر اعظم نے اپنی تقریر جاری رکھی جس پر اسپیکر نے غصے میں انہیں باہر چلے جانے کا حکم دیا۔

وزیر اعظم نے الزام لگایا تھا کہ عالمی ماحولیاتی تنظیم گرین پیس کا نام پاناما پیپرز میں شامل ہے جبکہ اس کو دیے جانے والے فنڈ مختلف جگہوں پر استعمال ہو تے ہیں۔ نیوزی لینڈ میں گرین پارٹی کے لیڈر جیمس شا نے اس پر سیخ پا ہو کر وزیر اعظم سے معافی کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ جو شخص وزیر اعظم ہوتے ہوئے بھی آپے سے باہر ہوجاتا ہے اسے پارلیمنٹ میں بیٹھنے کا کوئی حق نہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں