The news is by your side.

Advertisement

علاج کے لیے بھارت آنے والی خاتون کا زیادتی کے بعد سر قلم کردیا گیا

نئی دہلی: آئر لینڈ سے ذہنی علاج کے لیے بھارت آنے والی 33 سالہ خاتون کا زیادتی کے بعد سر قلم کردیا گیا۔ خاتون کی سر بریدہ لاش بعد ازاں جنگل میں درخت سے لٹکتی پائی گئی۔

پولیس کے مطابق مذکورہ خاتون ڈپریشن کا شکار تھیں اور آیورویدک علاج کی مقبولیت سن کر بھارت آئی تھی۔

بھارت آنے سے قبل وہ آئر لینڈ کے شہر ڈبلن میں اپنے ساتھی کے ساتھ رہائش پذیر تھیں تاہم بھارت وہ اپنی بہن کے ساتھ آئی تھیں۔

این ڈی ٹی وی کے مطابق بھارت آنے کے چند دن بعد ہی خاتون لاپتہ ہوگئی تھیں۔ آخری بار انہیں آیور ویدک علاج کے ایک سینٹر اور بعد ازاں ساحل پر دیکھا گیا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ خاتون رواں برس فروری میں بھارتی ریاست کیرالہ آئی تھیں۔ گمشدگی کے بعد 21 اپریل کو خاتون کی لاش ملی۔

پولیس کی تفتیش کے مطابق خاتون کو 2 افراد ورغلا کر اپنے ساتھ لے گئے، بعد ازاں انہیں نشہ آور اشیا کھلا کر زیادتی کا نشانہ بنایا اور بہیمانہ طریقے سے قتل کردیا۔

خاتون کی سر بریدہ لاش جنگل میں درخت سے جھولتی ہوئی ملی۔

پولیس کا کہنا ہے کہ واقعے میں ملوث دونوں مشکوک افراد پولیس کی تحویل میں ہیں۔ دونوں ملزمان منشیات فروش ہیں جبکہ ان میں سے ایک اس سے قبل بھی جنسی زیادتی کے جرائم کا ارتکاب کرچکا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں