The news is by your side.

Advertisement

ریستوران میں اپنے کھانے کے لیے مچھلی خود پکڑیں

ویسے تو آپ جب بھی کسی ریستوران میں جاتے ہیں تو آپ کے سامنے مینیو پیش کیا جاتا ہے جس میں سے پسندیدہ ڈش منتخب کرنے کے بعد وہ ڈش آپ کے سامنے پیش کردی جاتی ہے، تاہم جاپان کے ایک ریستوران میں آنے والوں کو اپنے کھانے کے لیے خود مچھلی پکڑنی پڑتی ہے۔

جاپان میں زاؤ نامی یہ ریستوران اپنی نوعیت کا منفرد ریستوران ہے۔ بحری جہاز کی طرز پر بنے ہوئے اس ریستوران کے بیچوں بیچ ایک بڑا سا ایکوریم بنا ہوا ہے۔

یہاں کھانے کے لیے آنے والوں کو ایک جال اور کانٹا دیا جاتا ہے جس کے ذریعے وہ اس ایکوریم سے مچھلی پکڑتے ہیں۔

مچھلی پکڑنے کے بعد یہ بیرے کے حوالے کردی جاتی ہے جو اسے آپ کی پسند کے مطابق بنوا کر پیش کردیتا ہے۔

گو کہ آپ چاہیں تو کسی ویٹر سے بھی مچھلی پکڑوا سکتے ہیں تاہم یہ طریقہ جیب پر بھاری پڑ سکتا ہے، چنانچہ یہاں آنے والے خود ہی مچھلی پکڑنے کو ترجیح دیتے ہیں۔

ریستوران میں مچھلی پکڑنا بظاہر یہاں آنے والوں کو تفریح فراہم کرنے کا ذریعہ نظر آتا ہے، لیکن اس کے پیچھے درحقیقت ایک نہایت بامعنی مقصد چھپا ہوا ہے۔

ریستوران کے مالک کا کہنا ہے کہ اس عمل کا مقصد دراصل لوگوں کو یہ بتانا ہے کہ وہ اپنے کھانے کے لیے ایک زندگی کا خاتمہ کر رہے ہیں۔

ان کا کہنا ہے کہ جاپان میں ہر کھانے سے پہلے دعا مانگی جاتی ہے، ’اس زندگی کا شکریہ جو آپ نے ہمیں دی‘، اور اس کے بعد آپ ایک زندگی کو کھاتے ہیں۔

ان کے مطابق اس طریقہ کار کا مقصد لوگوں میں زندگی کی اہمیت کی طرف توجہ دلانا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں