The news is by your side.

Advertisement

بھارتی وزیر کی بہو نے خودکشی کرلی

بھارت میں خودکشی کے واقعات میں ہر گزرتے دن کے ساتھ اضافہ ہو رہا ہے۔ مدھیہ پردیش کے وزیر تعلیم اندر سنگھ پرمار کی بہو نے خودکشی کرلی ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق وزیر تعلیم اندر سنگھ پرمار کی بہو نے پھانسی کا پھندہ لگا کر اپنی زندگی کا خاتمہ کرلیا۔ خودکشی کی وجہ اب تک سامنے نہیں آسکی تاہم بھارتی میڈیا کو ذرائع نے بتایا ہے کہ اندر سنگھ کی بہو نے گھریلو مسائل کی وجہ سے خودکشی کی۔

بھارتیہ جنتا پارٹی کے میڈیا انچارج شاجاپور ضلع وجے جوشی نے اندر سنگھ پرمار کی بہو کے انتقال پر تعزیت کا اظہار کیا۔

MP minister's daughter-in-law commits suicide

وزیر تعلیم اندر سنگھ پرمار کا تعلق بھی حکمران جماعت سے ہے۔ وہ 2019 سے بھارتی پارلیمنٹ کے رکن ہیں۔

بھارت میں خودکشی کا شرح زیادہ ہے۔ سال 2019 میں 1 لاکھ 39 ہزار سے زائد افراد نے خودکشی کی۔ عالمی ادارہ صحت بھارت میں خودکشی کو سنگین مسئلہ قرار دیتا ہے۔

گزشتہ روز بھارت کی ریاست تام ناڈو میں ایک 27 سالہ خاتون نے سسرال میں ٹوائلٹ کی عدم دستیابی پر اپنی زندگی کا خاتمہ کرلیا تھا۔

خودکشی کرنے والی خاتون ایک مقامی اسپتال میں نوکری کرتی تھیں اور ان کی شادی گزشتہ ماہ ہی ہوئی تھی۔ خاتون نے شادی سے قبل اپنے شوہر سے گھر میں ٹوائلٹ بنانے کا اصرار کیا تھا۔

گھر میں ٹوائلٹ نہ ہونے کی وجہ سے خاتون اپنے والدین کے گھر رہتی تھی۔ دونوں میاں بیوی میں ٹوائلٹ کے معاملے پر جھگڑا بھی ہوا تھا۔

خاتون نے آج والدین کے گھر میں خودکشی کرلی۔ اس کی لاش ایک کمرے کے پنکھے پر لٹکی ہوئی تھی۔ والدین نے خاتون کے سسرال والے کے خلاف مقدمہ درج کروا دیا۔ پولیس نے تفتیش شروع کر دی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں