The news is by your side.

Advertisement

کرونا وائرس، اٹلی میں لاشوں کے انبار لگ گئے ، قبرستانوں میں جگہ ختم

تھک گئے ہیں، اب مزید لاشیں نہیں گن سکتے ، اطالوی نرسیں

اٹلی : اٹلی میں صورتحال چین سے زیادہ  بدتر ہوگئی ، کرونا وائرس کے باعث لاشوں کے انبار لگ گئے جبکہ اسپتالوں میں بستر اور قبرستانوں میں دفنانے کیلئے جگہ نہ بچی، اطالوی نرسوں کا کہنا ہے تھک گئے ہیں ، اب مزید لاشیں نہیں گن سکتے۔

تفصیلات کے مطابق کروناوائرس نے ترقی یافتہ ممالک کو بھی جنجھوڑ دیا، اٹلی میں کرونا وائرس سے نمٹنے کیلئے حکومت کے ناقص انتظامات اور لوگوں کی غیر سنجیدگی اورلا پرواہی سے صورتحال خوفناک ہوگئی۔

اسپتالوں میں لاشوں کے انبار لگ گئے جبکہ اسپتالوں میں بستر اورقبرستانوں میں دفنانے کیلئے جگہ کم پڑ گئی، ایک ہی دن میں 475 افراد جان سے گئے ، جس کے بعد ہلاکتیں 3405 ہو گئی ہیں۔

اٹلی کے علاقے برگامو کے جدید ٹیکنالوجی سے لیس اسپتال بھی مریضوں کو بچا نہیں سکا، ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ لوگوں نے احتیاط کی اور نہ ہی بات سنی، مریضوں کیلئے بستر نہیں ہیں روز کئی سو لوگ مر رہے ہیں۔

اٹلی کے علاقے لمبارڈی میں صورتحال قابوسےباہرہے، لمبارڈی کےاسپتال میں مرنےوالوں کی تعدادزیادہ ہے، آرمی ٹرک میں لاشوں کو لے جایا جارہا ہے۔

اطالوی نرسیں کرونا کے باعث مرنے والوں کی لاشیں گن گن کر نڈھال ہوگئی ہے، نرسوں کا کہنا ہے کہ ہم اب مزید لاشیں نہیں گن سکتے۔

غیرملکی میڈیا کے مطابق اٹلی میں اس وقت 2600 سےزیادہ طبی عملہ وائرس کا شکار ہے جبکہ اٹلی میں مناسب سہولتیں نہ ملنے پر تیرہ ڈاکٹرز جان سےجاچکے ہیں۔

اطالوی ڈاکٹر کا کہنا ہے کہ لمبارڈی میں اسپتال چھوٹے اور مریض زیادہ ہیں ، ہمیں وینٹی لیٹرز، بستر، ڈاکٹر اور طبی عملےکی ضرورت ہے جبکہ اسپتالوں میں ڈاکٹروں اور نرسوں کی شدیدقلت ہے۔

خیال رہےدنیا بھر میں کرونا وائرس کے شکار افراد کی تعداد 2 لاکھ 20 سے تجاوز کر گئی ہے اور متاثرین کی تعداد میں مسلسل اضافہ ریکارڈ کیا جارہا ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں