The news is by your side.

Advertisement

کیرالہ بارش: موت بھی ماں بیٹے کو جُدا نہ کرسکی، رقت آمیز منظر

نئی دہلی: بھارتی ریاست کیرالہ میں شدید بارشوں اور اس کے نتیجے میں ہونے والی لینڈ سلائیڈنگ کے واقعات میں اب تک تیس سے زائد افراد موت کی وادی میں جاچکے، امدادی کارروائیوں کے دوران دیکھے گئے دلخراش مناظر نے دل دہلادئیے۔

بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق کیرالہ میں شدید بارشوں اور لینڈ سلائیڈنگ کے بعد امدادی کارروائیوں کا آغاز کیا گیا تو اڈوکی ضلع کے گاؤں کوکیئر میں ماں بیٹے کی لازوال محبت کا منظر دیکھنے کو ملا، جسے دیکھ کر امدادی کارکنان بھی فرط جذبات سے رودئیے۔

امدادی کارکنوں نے بتایا کہ ملبے تلے افراد کی تلاش کے دوران ماں اور بیٹے کی لاشیں ایک دوسرے سے گلے ملتے ہوئے ملی، جن کی شناخت اٹھائیس سالہ فوزیہ اور دس سالہ امین کے نام سے ہوئی، جبکہ ایک بچہ جھولے میں مردہ حالت میں ملا۔

یہ بھی پڑھیں: بھارت: آگ میں لپٹی فیکٹری سے ملازمین کی مدد کی پکار (کمزور دل حضرات نہ دیکھیں)

امدادی کارکنوں کے مطابق گذشتہ روز بھی کیچڑ اور ملبے کے ڈھیر سے انھیں نہایت ہی درد ناک منظر دیکھنے کو ملا تھا جب ملبے تلے دبنے والی تین بچوں کی لاشیں نکالی گئیں تو موت کے باوجود وہ ایک دوسرے کے گلے میں ہاتھ ڈالے ہوئے تھے، بچوں کی شناخت سات سال کی آمنہ ، آٹھ سال کی افسان اور چار سال کے اہیان کے ناموں سے ہوئی۔

واقعہ کا دلخراش پہلو یہ ہے کہ یہ تمام افراد ایک ہی خاندان سے تعلق رکھتے ہیں۔

دوسری جانب کیرالا ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کی تازہ ترین معلومات کے مطابق اکیس اکتوبر تک ریاست میں بارشوں اور تیز ہواؤں کی پیش گوئی کی گئی ہے، اس دوران 40 کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں