The news is by your side.

Advertisement

خادم حرمین شریفین اور جو بائیڈن کا پہلا رابطہ، اہم فیصلہ

ریاض: خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز اور امریکی صدر جو بائیڈن کے درمیان پہلا رابطہ ہوا ہے، جس میں دو طرفہ تعلقات کو زیادہ سے زیادہ مضبوط اور شفاف بنانے کا فیصلہ کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق سعودی عرب کے شاہ سلمان اور امریکا کے صدر جو بائیڈن کے درمیان جمعرات کو پہلی مرتبہ ٹیلی فونک رابطہ ہوا، جس میں علاقائی اور عالمی استحکام پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

ٹیلی فونک رابطے میں دونوں رہنماؤں نے گہرے تاریخی تعلقات کے تناظر میں دونوں ملکوں کے درمیان پارٹنرشپ کو مضبوط بنانے کی اہمیت پر زور دیا۔

سعودی خبر رساں ایجنسی ایس پی اے کی رپورٹ کے مطابق شاہ سلمان نے جو بائیڈن کو امریکا کے صدر کا عہدہ سنبھالنے پر مبارک باد دی، رہنماؤں نے بات چیت میں خطے کے اہم امور پر تبادلہ خیال کیا اور مشترکہ مفاد کی پیش رفت کا بھی جائزہ لیا۔

جو بائیڈن نے یمن میں معاہدے اور جنگ بندی تک پہنچنے کے لیے اقوام متحدہ کی کوششوں کے لیے مملکت سعودی عربیہ کے حمایت کو سراہا۔

شاہ سلمان نے کہا کہ سعودی عرب یمن میں جامع سیاسی حل تک پہنچنے کا آرزو مند تھا تاکہ یمنی عوام کو سلامتی اور ترقی حاصل ہو سکے۔

ادھر وائٹ ہاؤس کے ایک بیان مں کہا گیا ہے کہ امریکی صدر نے شاہ سلمان سے کہا کہ وہ جتنا ممکن ہو سکے دو طرفہ تعلقات کو زیادہ سے زیادہ مضبوط اور شفاف بنانے کے لیے کام کریں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں