site
stats
سندھ

کراچی میں مفت تعلیم کے نام پر بڑے فراڈ کا انکشاف

کراچی : شہر قائد میں نجی اداروں کی تعلیم کا فراڈیوں نے فائدہ اٹھانا شروع کر دیا۔ دھوکہ بازوں نے پندرہ ہزار اسکالر شپ اور فری او لیول اور اے لیول کی تعلیم کا جھانسہ دے کر شہریوں کو لوٹنا شروع کردیا، کئی طلبا جمع پونجی سے محروم ہو گئے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں تعلیم کے نام پر بڑے فراڈ کا انکشاف ہوا ہے۔ متعلقہ ادارے اس فراڈ سے تاحال لاعلم ہیں، طلباء وطالبات کے والدین کا کہنا ہے کہ تعلیم گھر کے نام پر مخیر حضرات سے لاکھوں روپے کی فنڈنگ حاصل کی گئی، اس کے بعد لوگوں کو مفت تعلیم کا جھانسہ دے کر داخلے کیے گئے.

مفت تعلیم دینے کے نام پر طلباء سے 2ہزار روپے فی کس بھی لئے گئے اور داخلوں کے بعد اسکول کا عملہ ہی غائب ہوگیا، اسکول کی پرنسپل آمنہ سبحان کا کہنا ہے کہ فری تعلیم کے نام پر ہمارے اسکول کا نام استعمال کیا گیا.

اطلاعات کے مطابق دھوکہ بازسعد سلیم نامی شخص نے گلیکسی آف لیڈرز کے نام سے سوشل میڈیا پر مفت تعلیم کا اعلان کیا اور اس کیلئے فیئر فیلڈ نامی ایک پرائیویٹ اسکول میں بچوں کو تعلیم دینے کا کہا گیا۔

مگر نہ تو بچوں کو مفت تعلیم دی گئی اورنہ ہی کسی اسکالر شپ کا اعلان کیا گیا، تحقیقات کے بعد معلوم ہوا کہ اسکول کا مالک ہی کوئی اور ہے، متاثرہ والدین نے حکام سے اپیل کی ہے کہ دھوکہ بازوں کو گرفتار کیاجائے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top