The news is by your side.

Advertisement

زندگی کو بدمزہ بنانے والے ناپسندیدہ افراد سے جان چھڑائیں

کیا آپ کے ذہن میں ناپسندیدہ افراد کی کوئی فہرست موجود ہے؟ اگر ان افراد سے ملنا پڑے تو آپ کیا کرتے ہیں؟ یقیناً یہ اکتا دینے والی صورتحال ہوتی ہے۔

بعض افراد اپنی منفی اور سطحی سوچوں کے باعث بیزار کردیتے ہیں اور کوئی بھی ان سے ملنا اور بات کرنا نہیں چاہتا۔ کیا آپ کو کبھی ایسی صورتحال کا سامنا کرنا پڑا ہے؟

اگر ہاں تو خوش ہوجائیے کیونکہ ماہرین کے مطابق ایسے طریقے موجود ہیں جن سے آپ اس قسم کے افراد سے نمٹ سکتے ہیں۔


برداشت کریں

یہ بات ہمیشہ یاد رکھیں کہ ہر انسان ایک جیسا نہیں ہوتا۔ ہر شخص میں کچھ خوبیاں اور خامیاں ہوتی ہیں۔ اسی طرح ہر انسان کا نقطہ نظر اور ذہنی معیار الگ ہوتا ہے۔

اگر آپ کو کبھی اپنے سے مختلف ذہنی معیار کے انسان کے ساتھ بیٹھنا پڑ جائے تو کچھ دیر اسے برداشت کریں۔


اپنی ترجیحات طے کریں

ایسا موقع ہی نہ آنے دیں کہ آپ کو ناپسندیدہ افراد کے ساتھ وقت گزارنا پڑے۔ اگر آپ فارغ ہیں تو اپنا کوئی ادھورا کام نمٹا لیں یا فون پر کسی قریبی عزیز یا دوست سے بات کی جاسکتی ہے۔


اپنے اندر کی آواز پر دھیان دیں

ایسے افراد سے ملتے ہوئے اگر آپ خود کو بدتہذیب نہیں کہلوانا چاہتے تو اس کا بہترین طریقہ یہ ہے کہ آپ دماغی طور پر وہاں سے غیر حاضر ہوجائیں۔ اپنے کاموں، مقاصد اور دیگر مصروفیات کے بارے میں سوچیں۔

مستقبل کے منصوبے بنائیں یا خوشگوار یادوں کو یاد کریں۔ اس طرح آپ جسمانی طور پر وہاں موجود ہوں گے لیکن دماغی طور پر اپنے ساتھ موجود ہوں گے۔


گہری سانس لیں

ناپسندیدہ افراد کی گفتگو اگر تناؤ میں مبتلا کرنے لگے تو ایک گہری سانس لیں اور خود کو پرسکون کریں۔ گہری سانس آپ کے اعصاب اور دماغ کو سکون پہنچاتی ہے۔


فاصلہ رکھیں

جب آپ دیکھ لیں کہ کوئی شخص آپ کے ذہنی معیار سے مطابقت نہیں رکھتا اور اس کے ساتھ وقت گزارنا آپ کو پریشانی میں مبتلا کردیتا ہے تو ایسے لوگوں سے فاصلہ پیدا کرلیں۔

انہیں موقع نہ دیں کہ وہ اپنی فرصت کے اوقات میں آپ سے گفتگو کریں یا آپ کو لمبی لمبی فون کالز کریں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں